ہمیں پیار ہے پاکستان سے

880

پاکستان کو معرضِ وجود میں آئے ہوئے70 برس سے زائد کا عرصہ بیت گیا،لیکن پاکستانیوں کےجذبہ حب الوطنی میں رتی برابر بھی فرق نہیں آیا۔ پاکستان کی بنیاد لاکھوں شہداء کے خون کی قربانی دے کر رکھی گئی، اورقربانیوں کا یہ سلسلہ 70 سالوں سے جاری ہے ۔ ان 70سالوں میں ارضِ وطن کی بقا کے لئے بھی لاکھوں جانوں کا نذرانہ پیش کیا گیا. پاکستان کی محبت میں اپنی جان کی قربانی نہ صرف افواجِ پاکستان کے جوانوں نے دی بلکہ اس کرہ ارض کا بچہ بچہ بھی دفاعِ وطن کے لئے ہر وقت تیار ہے. کسی بھی قوم کا جذبہ حبُ الوطنی اسوقت کھل کر سامنے آتا ہے جب وہ قوم کسی کرائسس سے دو چار ہوتی ہے ۔ پاکستان اپنی تاریخ کی اسوقت چوتھی جنگ لڑ رہا ہے اور وہ بھی ایک نقاب پوش دشمن کیساتھ، لیکن خوشی اور فخر کی بات یہ ہے کہ پوری قوم یکجا ہو کر افواج پاکستان کے شانہ بشانہ لڑ رہی ہے۔

پاکستانی قوم کا اپنے وطن سے محبت کاثبوت اس دنیا نے الیکشن 2018 میں بھی دیکھا جب ہماری بہادر قوم نے وطن کی محبت میں کئی قیمتی جانوں کا نذرانہ پیش کیا. ہماری نڈر قوم نے دفاعِ وطن کی خاطر سراج رئیسانی، اکرام اللّٰہ گنڈاپور سمیت الیکشن ڈیوٹی پر مامور افواج پاکستان کے جوانوں اور پولنگ اسٹیشن پر قطار باندھے 200 زائد قیمتی جانوں کا نذرانہ پیش کر کے اس بات کا ثبوت دیا کہ ہم بقائے پاکستان کی خاطر کسی بھی حد تک جا سکتے ہیں. پاکستان کے عشق و محبت میں سرشار 1965 کے مقبول ہیرو سپاہی مقبول حسین کو ہماری قوم کیسے بھول سکتی ہے جنہوں نے پاکستان زندہ باد کہتے کہتے انڈین آرمی سے اپنی زبان تک کٹوا دی اورجب پاکستان زندہ باد کہنے کو زبان نہ رہی تو اپنے لہو سے جیل کی دیواروں پہ پاکستان زندہ آباد تحریر کیا.

اگربہادری کے حساب سے ہم پاکستانی قوم کا موازنہ دوسری قوموں سے کریں تو ہمیں پاکستانی قوم پہلے نمبر پر دکھائی دے گی۔

”THE TOP TENS” سروے رپورٹ کے مطابق پاکستانی قوم دنیا کی بہادر ترین اور طاقت ور قوم ہے،جبکہ بہادری کے حساب سے ہندوستانی قوم کا نمبر 11واں ہے. پاکستانی قوم کو نہ صرف بہادری کے لحاظ سے صف اول میں دیکھا جاتا ہے بلکہ پاکستان کی افواج اور پاکستانی خفیہ ایجنسی ISI کا شماربھی دنیا بھرمیں ناقابل ِ شکست کی فہرست میں ہوتا ہے۔

آخر پاکستانی قوم پہلے نمبر پر کیسے نہ ہو؟حب الوطنی کی ایسی مثال کہیں اور دیکھنے کو نہیں ملتی کہ اسکول جاتے معصوم بچوں نے بھی وطن سے محبت کی خاطر اپنی ننھی جانوں کا نذرانہ پیش کیا. پاکستانی قوم بہادر اورخلوص سے سرشارہے جو ہمیشہ سے دوسروں کی حفاظت کیلئے اپنی جان دینے سے بھی دریغ نہیں کرتی. قوموں اور ملکوں کی تاریخ میں کچھ دن ایسے ہوتے ہیں جو عام ایام کے برعکس بڑی قربانی مانگتے ہیں۔ یہ دن فرزندان وطن سے حفاظت وطن کے لئے تن من دھن کی قربانی کا تقاضا کرتے ہیں، ماؤں سے ان کے جگر گوشے اور بوڑھے باپوں سے ان کی زندگی کا آخری سہارا قربان کرنے کا مطالبہ کرتے ہیں۔ 6 ستمبر یومِ دفاع پاکستان ہر سال انہیں قربانیوں اور انہیں باہمت گھرانوں سے اظہار یکجہتی کیلئے منایا جاتا ہے تاکہ ہم ان غیور پاکستانیوں کو اس بات کا احساس دلا سکیں کہ مشکل کی ہر گھڑی میں پورا پاکستان انکے ساتھ ہے.

پاکستان اللّٰہ رب العزت کی طرف سے نہ صرف پاکستانیوں کے لئے بلکہ عالم اسلام کے لیے بھی ایک نایاب تحفہ ہے۔، ہمیں اس عظیم تحفے کی قدر کرنی چاہیے. اللّٰہ سے دعا ہے کہ اللّٰہ رب العزت ہمارے وطن عزیز کو سلامت رکھے. آمین

حافظ محمد زبیر انفارمیشن ٹیکنالوجی سے وابستہ ہیں۔ کالم نگاری کا شوق رکھتے ہیں۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں مصنف سے زیادہ

تبصرے بند ہیں.