براؤزنگ زمرہ

جگ بیتی

‘چھوٹے’ کی تقدیر کب بدلے گی

گزرے دنوں کی بات ہے میں حجامت کے لیے سیلون پر پہنچا جہاں سے عموما کٹنگ کرواتا ہوں۔ رش کافی تھا، میں اپنی باری کا انتظار کرنے لگا۔ باری آنے پر کٹنگ کیلئے مخصوص کرسی پر بیٹھ گیا۔ ایک چھوٹی سی عمر کا لڑکا جس کی عمر بمشکل دس یا گیارہ سال ہو گی،…

اخلاقی بے راہ روی کا انجام تباہی‌

تاریخ اسلام کے اوراق پر نقش ہے کہ جب مسلمان فوج فاتح کی حیثیت سے بیت المقدس میں داخل ہوئی تو مغلوب یہودیوں نے اطراف شہر میں مختصر لباس میں ملبوس نازیبا حرکات کرتی طوائفوں کو کھڑا کر دیا لیکن باحیا مسلم سپاہیوں نے ان کی طرف نظر اٹھا کر بھی…

ٹوٹتے، بکھرتے رشتوں کی کہانی!

زیادہ پرانی نہیں، یہ گزشتہ جمعرات ہی کی بات ہے کہ جب دروازے پر ہونے والی کھٹ کھٹ سے آنکھ کھل گئی تھی ، دن کے ڈیڑھ یا دو بجے ہوں گے اور۔۔۔ لیکن ایک منٹ، ذرا ٹھہر جا ئیے۔۔۔!! بھئی دن کے اُس پہر میں ’سو‘ کیوں رہا تھا، اسکی وضاحت یہاں بیان…

اپنے پیارے کھونے والوں‌ کو انصاف ملے گا؟

پاکستانی ہوا بازی کی تاریخ میں متعدد فضائی حادثے رونماہوئے جن میں سینکڑوں قیمتی اور بے گناہ جانوں کا زیاں ہوا۔ ماضی قریب کے چند حادثات کا تذکرہ کرنا ضروری ہے کیونکہ ان حادثات کی تحقیقی رپورٹ کی شفافیت نے عوام اور اس شعبے سے منسلک لوگوں کے…

ایک نہیں۔۔۔ سینکڑوں زندگیاں جیو (2)

(گزشتہ سے پیوستہ) اسکے ساتھ ساتھ ہمارے معاشرے کی ایک انتہائی فرسودہ روایت جس کو ذات پات کا نام دیا گیا ہے وہ بہت اہم کردار ادا کرتی ہے۔ ہونا تو یہ چاہئے کہ انسان کے کردار سے اسکی عزت اور معاشرتی مقام طے ہونا چاہئے مگر ہمارا بیمار معاشرہ ذات…

ایک نہیں۔۔۔۔۔۔۔۔سینکڑوں زندگیاں جیو (1)

آج حسبِ معمول اپنے دفتر میں کمپیوٹر کی دنیا کے اسرارورموز کی کھوج میں مگن تھا کہ اسی دوران دفتر کا ایک ساتھی آ گیا۔ مجھے اس کی آمد کا ہلکا سا احساس ھوا مگر میں نے توجہ نہ دی۔ تھوڑی دیر انتظار کے بعد وہ مجھ سے مخاطب ہوا۔ سر میں معزرت خواہ…

لاک ڈاون نرمی، شہریوں پر دُہری ذمہ داری آن پڑی

کورونا وائرس نے کرہ ارض کا نظام درہم برہم کر دیا ہے، لاکھوں لوگ اس بیماری کا شکار ہیں، پوری دنیا میں ذہنی انتشار ہے۔ دنیا کی توجہ صرف ایک چیز پر مرکوز ہے کہ کس طرح اس عجیب و غریب دشمن پر قابو پایا جائے جو نظر بھی نہیں آتا۔ معیشت کے لحاظ سے…

اور…آپا چلی گئیں

ایک سال 9 روز اقتدار کی غلام گردشوں میں شب و روز گزارنے کے بعد، آپا چلی گئیں، آپا کی رخصتی جس انداز میں ہوئی وہ اہل بصیرت کے لیے عبرت کا سامان لیے ہوئے ہے۔ آپا کی خواہش تھی کہ وزیراعظم خود انہیں مستعفی ہونے کا کہیں تو ایک بار نہیں پچاس بار…

…پا جا سراغِ زندگی

نور اپنے شوہر جمیل پر مسلسل دباو ڈال رہی تھی کہ وہ اس بار سالگرہ پر اسے صرف سونے کا ہار ہی تحفے میں دے، بالکل ویسا ہی جیسا اس کی ہمسائی کو شوہر سے ملا ہے ورنہ وہ گھر چھوڑ کر میکے چلی جائے گی۔ نور کو شکوہ تھا کہ جمیل کو اُس سے ذرا بھی محبت…

!!!!اور مولانا نے معافی مانگ لی

یہ واقعہ مجھے سرگودھا کے ایک مقامی عالم دین نے سنایا تھا، ان کا کہنا تھا کہ ان کے ایک دوست نے انہیں رسم قل پر آنے کی دعوت دی تو انہوں نے یہ کہہ کر انکار کردیا کہ یہ بدعت ہے، جس پر انہوں نے مولانا طارق جمیل کا حوالہ دیا کہ کل مولانا نے فیصل…