براؤزنگ زمرہ

سرخیوں کے پیچھے

ٹرمپ کے ‘فلسطین امن معاہدے’ کا مستقبل

صدر ٹرمپ نے کہا ہے کہ فلسطین اسرائیل امن معاہدہ ایک بہت بڑی کامیابی ثابت ہو گا جو اگلے 80 سال تک چلے گا، لیکن حیرت انگیز طور پر زمینی حقائق کا بغور جائزہ لیا جائے تو یہ سوال خود بخود ذہن میں ابھرتا ہے کہ یہ پلان اگلے 80 منٹ کے لئے بھی قابل…

“ٹُو مچ فن” (ب، پ، چ، ح، گ اور ل  کی ایک  ناقابل اشاعت کہانی)

ایک مرتبہ کا ذکر ہے کہ ایک ملک تھا۔ آپ اس کو اپنی آسانی کے لیے چ سے شروع ہوتا ہوا کوئی بھی نام دے سکتے ہیں۔ ملک کی عوام بھی اسی ملک کے نام سے پکاری اور پہچانی جاتی  ہے جیسے چین میں چینی، ایران میں ایرانی اور پاکستان میں پاکستانی رہتے ہیں۔…

برطانوی حکومت  کے نیشنل آرکائیوز سے ہزاروں اہم فائلز کس نے غائب کیں؟

حال ہی میں انکشاف ہوا ہے کہ برطانوی حکومت کی نیشنل آرکائیوز میں سے ہزاروں اہم فائلز پراسرار طریقے سے غائب ہو گئیں ہیں۔ ان فائلز میں احمدی  جماعت کے قیام اور مرزا غلام احمد کے مجدد اور مسیح موعود ہونے کے دعوے کے بارے میں  مرتب کی گئی…

کپتان یا شہباز ؟اگلے وزیرِاعظم کیلئیے دو نام فائنل

سال 2017ء کو ملکی تاریخ میں عدلیہ کے اہم ترین برسوں میں شمار کیا جائے گا۔ نواز شریف کی نااہلی کا فیصلہ سنانے کے بعد ملک کی سب سے بڑی عدالت نے جمعہ پندرہ دسمبر کو ملکی عدالتی تاریخ کے دو مزید اہم فیصلے سنا دیئے۔حنیف عباسی کی جانب سے دائر…

نا اہل اکبری اور اہل اصغری

مرۃ العروس  اردو زبان کا ایک مشہور ناول ہے۔ یہ ناول ڈپٹی نذیر احمد دہلوی نے لکھا تھا۔ اس ناول کے کچھ کرداروں نے دھوم مچا دی تھی۔ اکبری، اصغری اور ماما عظمت کے کرداروں پر مبنی کہانیوں کو ہماری اردو کی نصابی کتابوں میں بھی شامل کیا گیا۔ اکبری…

اسرائیلی وزیر اعظم کا خط بنام نواز شریف

نور چشم اور عزیز ازجان نواز شریف، کرپشن کے مقدمات میں آج پھر میری روبکاری ہوئی۔ نااہلی کی تلوار میرے سر پر لٹک رہی ہے اور عوامی حمایت میں بتدریج کمی کا سامنا ہے۔ ان آزمائشوں سے گلوخاصی کی کوئی صورت بجھائی نہیں دیتی۔ آثار یہی ہیں کہ کچھ…

بلی شیر کی خالہ نہیں ہے

اگلے زمانوں میں بزرگ ہمیں ایک کہانی سنایا کرتے تھے جس میں ایک جنگل ہوتا تھا ۔ اس جنگل کا ایک عدد بادشاہ  بھی تھا ۔ اس بادشاہ کو شیر کہتے تھے۔ وہ شیر اصلی اور نسلی ہوتا تھا۔ پھر ایک بلی ہوتی تھی جو شیر کی خالہ ہوتی تھی اور شیر کو مختلف…

“تہانوُں کی؟”

چاند کی روشنی میں ہم نے ڈرتے ڈرتے اپنی "سر ی" کو بلند کر کے نگاہ مرد مومن سے ارد گرد کا جائزہ لیا تو تقدیر بدل چکی تھی۔ متحارب قوتیں پسپائی اختیار کر چکی تھیں۔ مشتعل افراد اپنا محاصرہ اٹھا لےگئے تھے۔ گویا ہم "پین دی سری" والی صورت حال سے…

دستِ غیب کو بوسہ

پاکستان جیسے ملک میں جہاں کی اکثریتی آبادی  حصول علم کو محض حصول روزگار کے لیے ایک بہتر وسیلہ سمجھتی ہے، معارف کا ایک جہان آباد ہے،ہم لوگ زندگی کے مختلف شعبوں میں دستِ غیب کی کارفرمائی کے اندھا دھند قائل ہیں۔ مثال کے طور پر آپ کے علم میں ہو…

ہمیں ایک ایسا حکمران چاہئیے جو۔ ۔ ۔

موجودہ حکومت اپنی مدت جلد ہی پوری کرنے والی ہے۔ اُس کے بعد الیکشن آجائیں گے اور الیکشن کا تو اپنا ہی ایک ماحول ہوتا ہے۔ الیکشنز کے آتے ہی ٹی وی چینلز، اخبارات اور انٹرنیٹ پر الیکشن کی ہی خبریں دیکھنے کو ملیں گی۔ جگہ جگہ جلسے ہوں گے اور…