لہو رنگ عید، دہشتگردی کا وار

پارہ چنار اور کوئٹہ میں دہشتگرد حملوں نے پاکستان میں عید کی خوشیوں کو گہنا دیا ہے۔ کافی عرصے بعد شدت پسندی نے پھر ہمارے امن اور بھائی چارے پر وار کیا ہے۔ ماضی میں بھی یہ علاقے دہشتگردوں کا ہدف رہے ہیں۔ کرم ایجنسی اور کوئٹہ فرقہ وارانہ…

توانائی کا بحران، وجوہات اور حل

توانائی کسی بھی معیشیت کے جسم میں دوڑتے ہوئے لہو کی حیثیت رکھتی ہے جسکی فراہمی کے بغیر کوئی بھی ملک ترقی کی منازل طے نہیں کر سکتا۔ توانائی کے حصول کیلئے دستیاب وسائل سے استفادہ کرنا اب بڑی حد تک ٹیکنالوجی کا مرہون منت ہے۔ مؤثر منصوبہ بندی…

ہماری معیشت، بجٹ اور اقتصادی ترقی: دائروں کا سفر جاری ہے

پاکستان کی ترقی کو مد نظر رکھتے ہوئے اگر ہم تاریخ پر نظر دوڑائیں تو سب سے بڑی رکاوٹ جو ہماری راہ میں حا ئل ہے وہ ہماری معاشی پسماندگی ہے۔ تقسیم ہند کے نتیجے میں جو اثاثے ہمارے حصے میں آئے وہ ایک نوزائیدہ مملکت کیلئے انتہائی ناکافی تھے۔…

عرب و فارس کی دہکتی چنگاری اور ہم

سعودی عرب میں منعقد ہونے والی عرب، اسلامک اور امریکہ سربراہی کانفرنس نے بالخصوص مشرق وسطیٰ اور بالعموم مسلم دنیا کے حوالے سے نئے خدشات کو جنم دیا ہے۔ سعودی شاہ سلمان نے براہ راست ایران کا تذکرہ کر کے معتدل رویہ رکھنے والے مسلم ممالک کیلئے…

ہڑپہ اور قدیم ہندوستانی تہذیب

انسان نے شعور کی منزلیں صدیوں کے سفر کے بعد طے کیں اور اس دوران وہ مختلف ادوار سے گزرا جو تاریخ کے اوراق میں محفوظ ہیں۔ وادئ سندھ کی قدیم تہذیب پر تحقیق جاری ہے۔ مہر گڑھ اور بلوچستان میں اس کے آثار چھ ہزار برس قبل کے ہیں۔ وادئ سندھ کی تہذیب…

اکھنڈ بھارت کا خواب اور پاکستان

ہندوستانی سیاست میں کامیابی کیلئے پاکستان دشمنی کو ایک نعرے کے طور پہ استعمال کیا جاتا ہے۔ تقسیم سے لے کر آج تک پاکستان کو کمزور کرنے کی سازشوں کے پس پردہ ہمیشہ ہندوستانی سرکار نظر آئیگی۔ حال ہی میں کلبھوشن یادیو کے مسئلے کو ہندوستانی حکومت…

کرپٹ نظام کے کنوئیں سے بالٹیاں نہیں کتا بھی نکالنا ہوگا

پاکستان کے سیاسی حالات کے تناظر میں ایک معروف چٹکلا یادداشت کا در کھٹکھٹاتا ہے۔ ایک گاؤں کا کنواں کتے کے ڈوب جانے سے آلودہ ہو جاتا ہے۔ اس صورت حال سے دوچار لوگ گاؤں کے مولوی صاحب سے رجوع کرتے ہیں کہ اب کیا جائے کہ پانی پاک ہو سکے اور اس کا…

یہ سیاستدان ہیں یا پورس کے ہاتھی؟

پارلیمنٹ کے حالیہ اجلاس کی کارروائی آج کل ہمارے ذرائع ابلاغ کے لیے موضوع بحث بنی ہوئی ہے، اور بنتی بھی کیوں نا؟ کشمیر کے موجودہ حالات اور ہندوستان کا دھمکی آمیز رویہ یقیناً ہماری سیاسی قیادت کی یکجہتی اور قومی سلامتی کے حوالے سے کسی مشترکہ…

عمران خان کو سیاسی فلسفے کی تلاش

انسانی تاریخ میں سیاست اجتمائی زندگی میں ہمیشہ بنیادی کردار ادا کرتی رہی ہے کیونکہ ریاستی نظام اور معاشرہ ہمیشہ کسی فلسفے اور اصول کے محتاج رہے ہیں جس کی بنیاد پہ انتطامی امور چلائے جا سکیں اور عوامی مفادات کا تعین و تحفظ کیا جا سکے۔ قدیم…

ہماری خارجہ پالیسی اور تاریخ کا دوراہا

رچرڈ نکسن نے اک بار کہا تھا کہ ہم اپنے دوست تو تبدیل کر سکتے ہیں مگر اپنے ہمسائے نہیں۔ یہ شخص امریکی تاریخ میں واٹرگیٹ سکینڈل کے حوالے سے تو شہرت رکھتا ہے مگر اپنے سیاسی کیرئر میں سفارتکاری کا بھی خاصہ ماہر مانا جاتا تھا۔ بطور صدر اسے ہینری…